Wednesday, July 25, 2012

انفاق فی سبیل اللہ

بسم اللہ الرحمن الرحیم


                دنیا کا منظرنامہ بڑی تیزی سے بدل رہا ہے۔ ‘کفر کا زوال اور اسلام کا عروج’ جو کل تک ایک خواب تھا، آج بحمداللہ عرب و عجم کے مجاہدین کی قربانیوں سے حقیقت کے سانچے میں ڈھل رہا ہے۔ سرمایہ دارانہ نظام کا اژدہا عصائے جہاد کے سامنے بے بس ہو چکا ہے۔ فرعون کے لہجے میں بات کرنے والا امریکہ آج خاک نشین طلباء کے سامنے ایڑیاں رگڑ رہا ہے۔امتِ مسلمہ کی سلامتی کے لیے خطرہ بنی رہنے والی کفریہ طاقتیں اپنے تحفظ میں بھی قاصر دکھائی دے رہی ہیں۔ مسلمانوں پر مسلط امریکہ کے دم چھلے حکمران ایک ایک کر کے ذلت و عبرت کا نشان بنتے جا رہے ہیں۔ منافق سیاستدانوں اور غدار جرنیلوں میں گھری قوم اب بہت سی حقیقتوں کا ادراک کر چکی ہے۔

                لیکن۔۔۔۔۔۔!
یہ  سب کچھ جادو کی چھڑی سے نہیں ہو رہا، بلکہ اس کے لیے امتِ مسلمہ کے قابلِ فخر جوانوں کی قربانیاں لگ رہی ہیں۔ عنقریب قائم ہونے والی اسلام کی حاکمیت انہی سرفروش مجاہدین کے دم قدم سے ہے جو اپنا سب کچھ لٹا کر امت کا سب کچھ بچانا چاہتے ہیں۔ ایسے میں امت مسلمہ کا بھی یہ شرعی فریضہ بنتا ہے کہ وہ کسی بھی لمحے اپنے عظیم محسنوں کو فراموش نہ کرے اور ہر ممکن طریقے سے ان کا تعاون کرتی رہے۔ خاص کر رمضان المبارک کی ان مقدس گھڑیوں میں، کہ جب ہر نیک عمل کا ثواب کئی گنا بڑھ جاتا ہے،نفاذِ شریعت کے اِن علمبرداروں کا کھلےدل اور کھلے ہاتھ سے تعاون کریں۔ پاکستان، کشمیر، افغانستان، عراق، شام، فلسطین، صومالیہ،یمن، شیشان،ترکستان، فلپائن، اندونیشیا، الجزائر، برما اور تھائی لینڈ، غرض ہر محاذِ جہاد سے لے کر دنیا بھر کے عقوبت خانوں تک، مجاہدینِ اسلام آپ کےمالی تعاون اور خلوص کے منتظر ہیں۔ وہ آپ ہی کو اپنا پشتیبان سمجھتے ہیں۔ پاکستان سمیت دنیا بھر میں نفاذِ شریعت کے لیے کوشاں مجاہدین اور اسیرانِ اسلام کی رہائی کے لیے دعاؤں کا بھی خصوصی اہتمام کریں۔ اللہ تعالیٰ ہم سب کا حامی و ناصر ہو۔آمین
انٹرنیٹ پر اس اپیل کا مقصد جہاد و مجاہدین کی مالی اعانت  کے حوالے سے عا متہ المسلمین کو تحریض دلانا ہے۔
اس حوالے سے  مجاہدین کے مستند ذمہ داران اور نمائندوں کو ہی ، تحفظ کے تمام اصولوں کو سامنے رکھتے ہوئے، اپنی مالی امداد پہنچایئے۔

1 comment:

  1. mali tuawan ka safe tareeka kia ha

    ReplyDelete

اپنے تبصروں سے اس بلاگ کو بہتر بنا سکتے ہیں